سرگودھا (نیوز)سرگودھا میں نوعمر لڑکی کی زبردستی شادی کی کوشش پولیس نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے ناکام بنا دی۔

 

پولیس کے مطابق بابو محلہ کی 13 سالہ ملیحہ کی شادی زیادہ عمر کے لڑکے سے زبردستی کرائی جا رہی تھی۔ فیکٹری ایریا پولیس نے موقع پر پہنچ کر دولہا، اس کے بھائی اور لڑکی کے والد کو گرفتار کر لیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ ملیحہ کا والد رحمان اس کی شادی بڑی عمر کے آدمی مشتاق سے زبردستی کروانا چاہتا تھا۔ دولہا مشتاق اپنے عزیز و اقارب کے ہمراہ بارات لے کر دلہن کے گھر پہنچا تو ملیحہ نے خود کو کمرے میں بند کر کے پولیس کو کال کردی۔

 

فیکٹری ایریا پولیس کے اے ایس آئی حامد نے ٹیم کے ہمراہ فوری کارروائی کرتے ہوئے دلہا مشتاق، اس کے بھائی اشفاق اور دلہن کے والد رحمان اللہ کو گرفتار کر لیا۔ پولیس نے ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں