اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) بیوی کی زندگی بچانے کے لیے شوہر نے لازوال قربانی کی مثال قائم

کر دی۔ سعودی عرب کے شہری نے اپنا گردہ عطیہ کر کے بیوی کی جان بچا لی، شہری کی اہلیہ دو سال سے گردوں کے عارضے کا شکار تھی۔

تفصیلات کے مطابق سعودی شہری نے انسانیت کی اعلیٰ مثال قائم کرتے ہوئے اپنی بیوی کی جان بچانے کے لیے گردہ عطیہ کر دیا۔ میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ حمد الفقیہ ایک سعودی شہری ہیں جن کی اہلیہ گزشتہ دو سال سے گردوں کے عارضے میں مبتلا تھیں۔ حمد الفقیہ پیشے کے اعتبار سے مدرسے میں معلم ہیں، جنہوں نے اپنی بیوی کی تکلیف کا احساس کرتے ہوئے اپنا گردہ عطیہ کر کے اس کی جان بچا لی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ گزشتہ دو سالوں سے خاتون کو ڈائیلاسیس کے تکلیف دہ مرحلے سے گزرتے دیکھ کر شوہر نے اپنا گردہ عطیہ کیا ہے۔ حمد الفقیہ نے اپنی

اہلیہ کی تکلیف کو مد نظر رکھتے ہوئے جب داکٹرز سے رابطہ کیا اور گردہ عطیہ کرنے کا کہا تو ڈاکٹر نے اس کے ضروری ٹیسٹ وغیرہ کیے، جب گردہ میچ کر گیا تو آپریشن کی منظوری دی گئی جس کے بعد کامیابی سے آپریشن مکمل ہوا اور سعودی شہری اپنی بیوی کو تکلیف سے نجات دلانے میں کامیاب رہا۔ میڈیا رپورٹس میں مزید بتایا گیا ہے کہ آپریشن کی کامیابی کے بعد اظہار مسرت کرتے ہوئے سعودی شہری کا کہنا تھا کہ وہ اپنی بیوی کی تکلیف سے پریشان تھا تاہم اب اسے سکون میں دیکھ کر دلی اطمینان محسوس کررہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں