لاہور (نیوز ڈیسک )2021 میں 10 ہزار سے زائد جوڑوں نے فیصل آباد کی سیشن کورٹ میں پسند کی شادیاں کیں حکومت کو نکاح رجسٹریشن فیس کی مد میں ایک کروڑ 20 لاکھ کی آمدن ہوئی جبکہ اشٹام فروشوں نے بھی لاکھوں کمائے۔2021 میں گھر سے بھاگ کر اور والدین کی

 

 

 

مرضی کے خلاف شادی کا رجحان بڑھ گیا۔ پسند کی شادی کےلیے 10 ہزار سے زائد جوڑوں نے سیشن کورٹ سے رجوع کیا۔ پسند کی شادی کیلئے 1200 روپے سرکاری رجسٹریشن فیس ہے۔ اس فیس کی مد میں سرکاری خزانے میں ایک کروڑ 20 لاکھ روپے جمع ہوئےجبکہ بیان حلفی کیلئے سو سو روپے کے 2 اشٹام پیپر استعمال ہوتے ہیں۔وکلا نے اشٹام کی فروخت اور قانونی معاونت فراہم کرنے پر لاکھوں روپے کمائے۔ ضلع کچہری، میں

 

 

 

پسند کی شادی کے ہزاروں کیسز رجسٹرڈ ہوئے۔ مزید خبروں تبصروں تجیزوں اور کالمز پڑھنے اور ہر وقت چوبیس گھنٹے اپ ڈیٹ رہنے اور ملک کے حالات سے با خبر رہنے کیلئے ہمارا پیج لائیک اور شیئر ضرور کریں اور اپنے دوستوں سے بھی شیئر کی درخواست کریں ہم آپ کے بے حد مشکور ہوں گے شکریہ

 

 

 

 

اپنا تبصرہ بھیجیں