شادی کرنا سب چاہتے ہیں۔ لیکن شادی کے بعد ہر کوئی خوش نہیں رہ پاتا۔ مختلف لوگوں کی مختلف کہانیاں ہیں۔ لیکن ایک خان بھائی بیچارے اپنی شادی سے بہت پریشان ہیں۔ ایک نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے خان بھائی نے اپنی شادی کے بعد اور پہلے کی پوری کہانی بتا دی۔

بیچارے اپنی شادی سے بھی پریشان ہیں اور دوستوں سے بھی۔ خان بھائی کتہے ہیں کہ: ” 5 منٹ دیر ہو جائے تو بیوی سوالات پوچھتی ہیں کہاں ہو گھر آ کر کام کرو۔ برتن تو دھو دو۔ کپڑے دھو دھو۔ غلام بنایا ہوا ہے۔ میری بیوی برتن تو کیا پوچھا بھی مجھ سے ہی لگواتی ہے۔ شادی سے پہلے بادشاہ والی زندگی گزاری۔ آج تک جھاڑو کو ہاتھ نہ لگایا تھا، بیگم کے آتے ہی گھر داری سنبھال لی۔ بیوی شادی کے بعد ببر شیر بن جاتی ہے۔

اگر بیوی کو کسی کام کے لیے منع کر دو تو سسر ہمیں اُلٹا ذبح کر دے گا۔ سسر ڈائناسور ہے۔ شادی سے پہلے میری بیوی اور سسرال والے بہت اچھے تھے۔ بیوی تو ملکہ تھی۔ شادی کے بعد تو برباد ہوگئے۔ کنگلے ہوگئے ہیں۔ شادی سے پہلے پوچھتی تھیں جانو کہاں ہو؟ اب کہتی ہیں گھر آؤ

کام کون کرے گا؟ چھترول تو میری روزانہ ہوتی ہے۔ اب تو میں جب تک زندہ ہوں بیوی کے لیے جھاڑو پوچھا کرتا رہوں گا۔ دوست پوچھتے ہیں کہ شادی کے بعد بدل گئے ہو ملنے نہیں آتے؟ ارے کیسے آؤں گھر میں بیوی جو ببر شیر بنی بیٹھی ہے اس کا کیا کروں؟ ابھی شادی تو کو صرف 4 سال ہی ہوئے ہیں۔ ”

 

اپنا تبصرہ بھیجیں