ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں ایک خاتون کے شوہر کی موت واقع ہوئی اور وہ جائیداد میں حصہ لینے کے لیے گئی تو اس پر ایسا انکشاف ہوا

کہ پیروں تلے زمین نکل گئی۔ گلف نیوز کے مطابق اپنے شوہر کی موت کے بعد اس خاتون کو علم ہوا کہ وہ اسے اپنی زندگی میں طلاق دے چکا تھا اور اب خاتون اس کی جائیداد میں سے حصہ نہیں لے سکتی تھی۔رپورٹ کے مطابق مکہ مکرمہ کی رہائشی اس خاتون نے شوہر کی موت کے بعدعدالت سے رجوع کیا تھا اور استدعا کی تھی کہ اس کا نام بھی شوہر کی جائیداد کے ورثاءکی فہرست میں شامل کیا جائے۔ اس موقع پر عدالت میں خاتون پر منکشف ہوا کہ اس کا شوہر اسے طلاق دے چکا تھا ، لہٰذا اب اس کا نام مرحوم کے ورثاءکی فہرست میں شامل نہیں کیا جا سکتا۔رپورٹ کے مطابق متوفی شخص اپنی موت سے ایک سال قبل ایک حادثے کا شکار ہو کر کوما میں چلا گیا تھا اوراس کے بعد مسلسل بے ہوش رہنے کے بعد اسی حالت میں اس کی موت واقع ہو گئی۔ عدالت میں آدمی کے پہلی بیوی سے پیدا ہونے والے بیٹے کا کہنا ہے کہ اس کا باپ کوما میں جانے سے پہلے اپنی اس بیوی کو طلاق دے چکا تھا۔ اس کی طرف سے طلاق کا ثبوت عدالت میں پیش کیے جانے پر جج نے خاتون کے خلاف فیصلہ سنا

اپنا تبصرہ بھیجیں