اسلام آباد(نیوز ڈیسک) اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے رواں سال کی چوتھی مانیٹری پالیسی کا اعلان کر دیا گیا، اگلے دو ماہ کے لیے شرح سود 7 فیصد پر برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔زرِمبادلہ کے ذخائر تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئے، اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے اعداد و شمار کے مطابق زرمبادلہ کے ذخائر 25 ارب ڈالر سے تجاوز کرگئے۔

فاریکس ایسوسی ایشن سے جاری اعداد و شمار کے مطابق منگل 27 جولائی کو کاروباری دن کے اختتام پر ڈالر کی قیمت 80 پیسے اضافے کے بعد 161.40 تک جاپہنچا۔ارسا کے مطابق 20 سے 27 جولائی کے دوران یومیہ اوسطا 3 لاکھ ایکڑ فٹ پانی کا ذخیرہ ہوا اور گزشتہ 7 روز میں مجموعی آبی ذخائر 46 لاکھ سے بڑھ کر 66 لاکھ ایکڑ فٹ ہوگئے ہیں۔ جب کہ سونے کی قیمت میں مسلسل کمی پاکستان اور بین الاقوامی میں سونے کی قیمت میں کمی ہوگئی، فی تولہ سونا 500 روپے اور فی اونس سونا 13 ڈالر سستا ہوگیا۔ دوسری جانب این سی او سی کا اجلاس بغیر کسی نتیجہ کے ختم وزرا کی عدم دستیابی کے سبب اجلاس صرف پندرہ منٹ ہی جاری رہا۔تفصیلات کے مطابق تعلیمی ادارے کھولنے یا بند کرنے سے متعلق این سی او سی کا اجلاس وزراء کی عدم دستیابی کے سبب بغیر کسی نتیجہ ختم ہو گیا۔ قبل ازیں سکول کھولنے سے متعلق این سی او سی کے اجلاس کے لئے 18جولائی کی تاریخ دی گئی تھی اجلاس میں وزرائے تعلیم بذریعہ ویڈیولنک شرکت کرنا تھی سکول 15اگست سےکھلیں گےیایکم ستمبر سے تا ہم اس حوالے سے این سی او سی کا اجلاس بغیر کسی نتیجہ کے ختم ہو گیا۔ ذرائع کے مطابق اب تمام صوبے کورونا کی صورتحال کا خود ہی جائزہ لیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں